105

لاک ڈاون کے دوران ڈاکٹروں، ہیلتھ ورکروں اور

لازمی خدمات کی نقل و حمل کو یقینی بنایا جائےگا:آئی جی پی کشمیر
نیوزسروس

سری نگر:۹۲، اپریل:جموں وکشمیرپولیس کے صوبائی سربراہ وجئے کمارنے جمعرات کے روزاسبات کایقین دلایاکہ لاک ڈاون کے دوران ڈاکٹروں، ہیلتھ ورکروں اور لازمی خدمات کی نقل و حمل کو یقینی بنایا جائے گا۔خیال رہے کہ جموں و کشمیر حکومت نے کورونا وائرس کے کیسوں میں غیر معمولی اضافے کے پیش نظرسری نگراورجموں سمیت11 اضلاع میں جمعرات کی شام7بجے
سے 84 گھنٹوں تک جاری رہنے والا’مکمل کوروناکرفیوو لاک ڈاﺅن‘ نافذ کرنے کا اعلان کیا ہے۔پولیس کے انسپکٹر جنرل کشمیر زون وجے کمار نے جمعرات کو آفیشل ٹویٹر ہینڈل پر اپنے ایک ٹویٹ میں کہاکہ جموں وکشمیرپولیس کو لاک ڈاون کے دوران ڈاکٹروں، ہیلتھ ورکروں اور لازمی خدمات کی بلا خلل نقل و حمل کو یقینی بنانے کی ہدایات دی گئی ہیں۔انہوں نے لوگوں کو محفوظ رہنے کےلئے گھروں میں ہی رہنے کی اپیل کرتے ہوئے کسی بھی مدد کےلئے112پر ڈائل کرنے کو کہا ۔قابل ذکر ہے کہ ملک بھر کے ساتھ ساتھ جموں وکشمیر میں بھی کورونا کی دوسری لہر تیزی سے پھیل رہی ہے،اورمقامی حکومت نے مہلک وائرس کی دوسری لہرپرقابو پانے کیلئے حالیہ دنوں میں کئی اقدامات اُٹھائے اورکئی احکامات جاری کئے ۔جموں و کشمیر انتظامیہ نے کورونا کی روک تھام کو یقینی بنانے کےلئے پہلے ہی جزوی لاک ڈاون نافذ کر رکھا ہے۔جسکے تحت سبھی قصبہ جات بشمول سری نگروجموں شہرمیں قائم بازاروں میں تجارت کرنے والے دکانداروں اورتاجروں سے باری باری ایک کے بعدایک دن دکانات کھولنے کی اجازت دی گئی ہے ۔جبکہ اسے پہلے حکومت نے تمام طرزکی تعلیمی سرگرمیوں پرروک لگاتے ہوئے سبھی اسکولوں اورکالجوں ویونیورسٹیوںکومرحلہ واربنیادوں پراحکامات جاری کرکے بندکردیاہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں