121

SDHسوپورکی کووڈ19سینٹرمیں تبدیلی کامعاملہ

عام بیماروں اورحاملہ خواتین کوسخت مشکلات
MCHسوپورمیں طبی سہولیات اورنہ ضروری ٹیسٹنگ آلات
الطاف حسین

سوپور:۶۱،اپریل:شمالی قصبہ سوپور اوراسکے نواحی درجنوں علاقوں ودیہات سے تعلق رکھنے والے لوگوں کوبیماروں اورحاملہ خواتین کوطبی سہولیات فراہم کرانے میں سخت مشکلات کاسامناکرناپڑرہاہے کیونکہ سب ڈسٹرکٹ اسپتال سوپور کوکووڈ19مریضوں کیلئے مخصوص کئے جانے کے بعداب سبھی دیگربیماروں بشمول حاملہ اوردردزہ میں مبتلاءخواتین کومدراینڈچائلڈ کئیر یعنیMCHسوپورکارُخ کرناپڑتاہے ،جہاں نہ توتسلی بخش طبی سہولیات بہم ہیں ،نہ ڈاکٹردستیاب ہیں اورنہ مختلف امراض کی تشخیص کیلئے درکارمشینیں موجودہیں ۔ایم سی ایچ سوپوراپنے رشتہ داروں کوبغرض علاج ومعالجہ لینے
والے کئی افرادنے بتایاکہ یہاں طبی سہولیات کافقدان پایاجاتاہے ۔انہوں نے کہاکہ یہاں ضروری ٹیسٹ کیلئے درکارمشینیں موجودنہیں ،ڈاکٹر بھی کم قلیل تعدادمیں تعینات ہیں ۔انہوں نے بتایاکہ کوئی بڑامیڈیکل ٹیسٹ کراناہوتوکسی اوراسپتال جاناپڑتاہے یاکہ کسی نجی کلنک یالیبارٹری پرجاناپڑتاہے ۔انہوں نے بتایاکہ ایم سی ایچ سوپورمیں کسی بیمار کاآپریشن بھی نہیں کیاجاتاہے کیونکہ یہاں ایسی کوئی سہولیت دستیاب نہیں ہے ۔لوگوں نے بتایاکہ بیماروں بشمول دردزہ میں مبتلاءخواتین کوایم سی ایچ سوپورسے جی ایم سی بارہمولہ اورپٹن اسپتال منتقل کیاجاتاہے ۔انہوں نے مانگ کی کہ ایس ڈی ایچ سوپورمیں جلد سے جلد معمول کی طبی خدمات کوبحال کیاجائے اوراگرکووڈ19مریضوں کیلئے یہاں ایک اسپتال کومخصوص رکھنے کی ضرورت ہے توکسی متبادل جگہ یااسپتال اسکے لئے مخصوص کیاجائے ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں