480

3روزہ ہفتہ وارلاک ڈاﺅن کے بعدجموں وکشمیر کے سبھی20اضلاع میں معمولات زندگی بحال

50فیصددُکانات کھلے ،بازاروں میں چہل پہل
12اضلاع میں جمعرات تک بندشوں میں نرمی،8اضلاع میں دن کالاک ڈاﺅن مکمل طورپرختم
3روزہ ہفتہ وارلاک ڈاﺅن کے بعدجموں وکشمیر کے سبھی20اضلاع میں معمولات زندگی بحال
50فیصددُکانات کھلے ،بازاروں میں چہل پہل
12اضلاع میں جمعرات تک بندشوں میں نرمی،8اضلاع میں دن کالاک ڈاﺅن مکمل طورپرختم
سی این آئی

سرینگر/۱۲،جون/کورونا وائرس کی دوسری لہر کے چلتے جموں کشمیر میں 3 روز ہفتہ وار کورونا کرفیو کے بعد سوموار کووادی کے تمام علاقوں میں معمول کی زندگی دوبارہ پٹری پر لوٹ آئی اور انتظامیہ کی جانب سے جاری کردہ گائیڈ لائیز کے مطابق دکانیں کھل گئی جبکہ سڑکوںپر ٹریفک بھی رواں دواں تھاجس کے نتیجے میں بازار وں میں رونق لوٹ آئیں ۔ جموں کشمیر کے بیشتر اضلاع میں کورونا کرفیو کے تین دن بعد سوموار کو معمول کی زندگی دوبارہ پٹری پر لوٹ آئیں ۔ سوموار سے جموں کشمیرکے سبھی20اضلاع میں کچھ مشروط شرائط کے ساتھ کاروباری و تجارتی سرگرمیاں بحال ہونے کی اجازت ہو گی جبکہ 50فیصدمسافروں کیساتھ پبلک ٹرانسپورٹ کو سڑکوں پرچلنے کی اجازت دی جائے گی ۔خیال رہے 8اضلاع میں ہفتہ واربندشوں کاسلسلہ ختم کردیاگیا ہے ،جن میں سے 3اضلاع کشمیرمیں اورجموں شہرسمیت باقی5اضلاع جموں صوبے میں ہیں ۔ جموں کشمیرانتظامیہ کی جانب سے جاری کردہ حکمنامہ کے مطابق کورونا کرفیوکے بعد سوموارکے روز بازاروں میں50 فیصد دکانیں کھل گئیں اور سڑکوں پر
بھی پبلک ٹرانسپورٹ کی جزوی نقل و حمل بحال ہوئی۔سوموار کی صبح سے ہی شہر سرینگر کے ساتھ ساتھ وادی کے دیگر اضلاع میںگائیڈ لائیزکے تحت دکانیں کھل گئی جبکہ ساتھ ہی سڑکوں پر گاڑیوں کی نقل و حمل بحال ہونے کے ساتھ ہی رونق لوٹ آئی ۔ شہر سرینگر کے ساتھ ساتھ دیگر اضلاع میں بھی لوگوں کی بھاری بھیڑ امڈ آئی جبکہ سڑکوںپر ٹریفک بھی رواں دواں تھا ۔ادھر وادی کے شمال و جنوب میں کاروبار بحال ہوا اور دکانیں کھول دی گئیں۔ تاہم رےڈزون والے علاقوں مےں ہر طرح کے معمولات ٹھپ تھے۔وادی کے تمام اضلاع میں سوموار کی صبح سے ہی تمام تجارتی و کاروباری سرگرمیاں ٹھپ ہوکر رہ گئی جبکہ سڑکوںسے ٹریفک کی نقل و حمل بھی رواں دواں تھی ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں