604

بھاجپا شادماں ،باقی سیاسی پارٹیاں نالاں

بھارتیہ جنتاپارٹی یوا مورچہ کی جموں میں ترنگا ریلی

سری نگر:۵،اگست:5،اگست2019کولئے گئے فیصلوں کے 2سال مکمل ہونے پر جموں وکشمیر کے سیاسی وعوامی حلقوںکا ملا جلا ردعمل سامنے آیاہے ۔جہاں بھارتیہ جنتاپارٹی کے لیڈراس دن کویوم جشن کے طورمناتے ہیں ،وہیں کشمیرنشین سیاسی پارٹیاں اس دن کویوم سیاہ بتاتی ہیں ۔جہاں کشمیروادی میں جمعرات کواس دن کی دوسری سالگرہ کے موقعہ پر بازاروں میںففٹی ففٹی ہڑتال رہی،وہیں جموں شہر اوردیگر اضلاع میں معمول کی سرگرمیاں جاری رہیں۔اس دوران جموں شہرمیں بھارتیہ جنتاپارٹی یوامورچہ کی جانب سے ایک ترنگا ریلی نکالی گئی ،جس میں مورچہ میں شامل درجنوں نوجوان لڑکوں اورلڑکیوں نے شرکت کی ۔ہاتھوں میں ترنگا لئے اورلہراتے ہوئے یوامورچہ کارکنوںنے جموں شہر کے کئی بازاروں سے پیدل مارچ کیا ،اوراس دوران یوامورچہ جموں کے کچھ لیڈروںنے میڈیا نمائندوں
کیساتھ بات چیت بھی کی ۔جموں و کشمیر کے بی جے وائی ایم کے صدر ارون پربھات نے کہا کہ آرٹیکل 370 کی منسوخی کے بعد علاقے کے لوگوں کو مساوی حقوق ملے،اوراب ترقی ہورہی ہے ۔انہوں نے کہاکہ ہم نے کبھی نہیں سوچا تھا کہ اس طرح جموں و کشمیر میں ترقی ہوگی۔ نوجوانوں کو میرٹ کی بنیاد پر روزگار مل رہا ہے۔ وزیر اعظم نریندر مودی اور مرکزی وزیر داخلہ امت شاہ نے70 سال کی ناانصافی کا خاتمہ کیا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں