591

منگل کی صبح کشتی اُلٹنے سے جہلم میں ڈوبے باپ بیٹے سمیت3افرادکاہنوزکوئی پتہ نہیں

ماہر غوطہ خور اور خصوصی ٹیمیں مصروف عمل
نعشوں کو نکالنے کی کوششیں جاری ، ابھی تک کوئی نئی پیش رفت نہیں:آئی جی پی کشمیر وی کے بردی
نیوزسروس

سری نگر:۷۱، اپریل:منگل کی صبح گنڈ بل سری نگرمیں ایک کشتی اُلٹ جانے کے نتیجے میں متعددافرادکے ڈوب جانے والوں میں شامل تین لاپتہ افرادکو ابھی تک جہلم سے برآمد نہیں کیاجاسکا تھا جبکہ پولیس اورا یس ڈی آرایف کی ٹیموں نے منگل کودیر رات تک تلاشی آپریشن جاری رکھا۔یاد رہے اس حادثے میں 2جڑواں بھائیوں اوراُن کی ماں سمیت 6افراد لقمہ اجل بن گئے تھے جبکہ ایک درجن سے زیادہ افرادکو بچالیاگیاتھا۔ملی تفصیلات کے مطابق منگل کی صبح تقریباًساڑھے 7بجے گنڈ بل بٹوارہ سری نگرکے نزدیک ایک کشتی کے اُلٹ جانے کے نتیجے میں دریائے جہلم میں ڈوب کر لاپتہ ہونے والے باپ بیٹے سمیت تین افرادکی تلاش دوسرے روز بھی جاری رہی ،تاہم بدھ کی سہ پہران لاپتہ افرادکوبرآمد نہیں کیا گیاتھا۔حکام نے بتایاکہ منگل کو رات کے گیارہ بجے تک تلاشی کارروائی جاری رکھی گئی اورپھراندھیرے نیزجہلم میں پانی کے تیز بہاﺅ کی وجہ سے تلاشی آپریشن کو روک دیاگیا ،انہوںنے بتایاکہ بدھ کی صبح پھرتلاشی آپریشن شروع کیاگیا،اورمتعددٹیمیں باپ بیٹے سمیت تین افراد کی نعشوں کونکالنے کی کوششوں میں مصروف ہیں ۔انہوںنے مزید کہاکہ نعشوں کو برآمد کئے جانے تک تلاشی آپریشن جاری رکھاجائیگا۔اس دوران کشمیر زون کے انسپکٹر جنرل آف پولیس ودھی کمار بردھی نے بدھ کو کہا کہ دریائے جہلم کے پانی میں لاپتہ تینوں کی تلاش کےلئے غوطہ خوروں اور اسکین ٹیموں کی جانب سے مسلسل کوششیں جاری ہیں۔انہوںنے بتایاکہ غوطہ خور اور اسکین ٹیمیں لاپتہ تینوں کا پتہ لگانے کےلئے علاقے میں مسلسل تلاش کر رہی ہیں۔ اس سلسلے میں ریسکیو آپریشن منگل کودیررات تک جاری رہا اور آج صبح بھی دوبارہ شروع کیا گیا۔ آئی جی پی کشمیر زون نے کہاکہ ہم انہیں تلاش کرنے اور حاصل کرنے کی کوشش کر رہے ہیںتاہم ابھی تک کوئی نئی پیش رفت نہیں ہوئی ہے۔ایک سوال کے جواب میں آئی جی پی کشمیر نے کہا کہ ان خصوصی غوطہ خوروں کی پانی اور پانی کے کرنٹ کے بارے میں اپنی سمجھ ہے۔یہ خصوصی غوطہ خور اس علاقے کی تلاش کر رہے ہیں جہاں انہیں جسم کے زیادہ امکانات ملتے ہیں۔ عام طور پر یہ دیکھا گیا ہے کہ جسم کچھ دیر بعد گلنے سڑنے کی وجہ سے خود ہی سطح پر آجاتا ہے۔آئی جی پی کشمیر زون نے مزید کہا کہ ہم نے پہلے ہی دریائے جہلم کے کنارے واقع سری نگر کے تمام پولیس اسٹیشنوں کو الرٹ کر دیا ہے اور انہیں ہدایت دی ہے کہ وہ پیش رفت پر نظر رکھیں اگر وہ کسی کو دیکھتے ہیں۔قابل ذکر ہے کہ منگل کی صبح سری نگر کے مضافات میں دریائے جہلم میں ایک کشتی الٹنے سے 4 بچوں سمیت6 افراد جان کی بازی ہار گئے۔ یہ واقعہ سری نگر کے گنڈبل علاقے میں پیش آیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں